باسکٹ بال کا عا لمی دن، 6 نومبر

6 نومبر،  دنیا بھر میں باسکٹ بال کے عالمی دن کے دور پر منایا جاتا ہے۔باسکٹ بال کواگرچہ دنیا بھرمیں وہ اہمیت حاصل نہیں جو کرکٹ یا فٹبال کو ہے۔لیکن چند ممالک میں آج بھی یہ بہت شوق سے کھیلا جاتا ہے۔ میساچوسیٹس میں واقع سپرنگ فیلڈ کالج کے انسٹرکٹر اور گریجویٹ طالب علم جیمز نائی سمتھ نے اس کھیل کا ایجاد 1891میں کیا تھا اور اس نئے کھیل کا لفظ جنگل کی آگ کی طرح پھیل گیا جو کی ایک فوری کامیابی تھی۔

باسکٹ بال کا کھیل پچاس فٹ لمبے اور چھیالس فٹ چوڑے کورٹ پر کھیلا جاتا ہے۔اس کا اندرونی فرش عموما فارسک کا ہوتا ہے۔1891میں امریکا کےجیمزنائی سمیتھ نے ایک روز لگاتار بارش ہونے پر اپنی جم کی کلاس جاری رکھنے کے لیے اس کھیل کا نقشہ بنایا تھا۔اس نے آمنے سامنے کی دو دیواروں پر 10فٹ کی اونچائی سے ایک ایک ٹوکری لٹکائی اور یوں ایک نیا کھیل ایجاد ہو گیا۔اسکا پہلا باقاعدہ میچ 20جنوری 1892میں نیو یارک میں ۹کھلاڑیوں کے ساتھ کھیلا گیا۔
باسکٹ بال ڈےجیمز نائی سمتھ کی سالگرہ کے موقع پر منایا جاتا ہے۔اس کھیل میں سب سے زیادہ فاتح قرار پانے والا ملک امریکہ ہے۔