پی سی بی کرکٹ کمیٹی کے چیئرمین اقبال قاسم کا استعفیٰ منظور

پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) نے کرکٹ کمیٹی کے سربراہ اقبال قاسم کا استعفیٰ منظور کرتے ہوئے کہا ہے کہ ان کے متبادل کا جلد ہی اعلان کیا جائے گا۔

پی سی بی کی جانب سے جاری بیان کے مطابق 'اقبال قاسم نے 3 ستمبر کو اپنا استعفیٰ بھیجا تھا اور کہا تھا کہ وہ ایک ڈمی چیئرمین ہیں جو ایک مستحق میچ ریفری بھی تجویز نہیں کرسکتا'۔

اقبال قاسم نے کہا تھا کہ 'کرکٹ کھیلنے کے لیے اہلیت کے معیار پر پورا اترنے والے کرکٹرز کے ساتھ ہونے والی ناانصافی دیکھ کر دکھ ہوتا ہے'۔

پی سی بی نے اپنے بیان میں کہا کہ 'یہ واقعی افسوس ناک ہے کہ اقبال قاسم جیسی صلاحیتوں کے حامل ایک نامور اور تجربہ کار کرکٹر رضاکارانہ طور پر اپنا عہدہ چھوڑ رہے ہیں'۔

بیان میں کہا گیا کہ 'کھلاڑی اور ایک انتظامی سربراہ کی حیثیت سے کرکٹ کے لیے ان کی خدمات شان دار ہیں، پی سی بی ان کے فیصلے کا احترام کرتا ہے اور ان کے مستقبل کے لیے نیک خواہشات کا اظہار کرتا ہے'۔

بورڈ نے فیصلے پر مایوسی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ 'پی سی بی کو مایوسی ہے کہ کرکٹ کمیٹی کے چیئرمین میرٹ اور ایک آزادانہ پینل کے فیصلے کا احترام کرنے کے بجائے اپنی تجویز پر عمل نہ ہونے پر استعفیٰ دے رہے ہیں'۔

مزید کہا گیا کہ 'پی سی بی کے لیے یہ سمجھنا بھی تکلیف دہ ہے کہ جب اقبال قاسم نے 31 جنوری 2020 کو کرکٹ کمیٹی کے سربراہ کی حیثیت سے اپنا عہدہ سنبھالا تھا تو اس وقت پی سی بی کا نیا آئین 2019 نافذالعمل تھا'۔