Warning: "continue" targeting switch is equivalent to "break". Did you mean to use "continue 2"? in /home/ch51dm/public_html/templates/interactive/lib/menu/GKBase.class.php on line 114

Warning: "continue" targeting switch is equivalent to "break". Did you mean to use "continue 2"? in /home/ch51dm/public_html/templates/interactive/lib/menu/GKHandheld.php on line 76
پبلک ٹرانسپورٹرز نے کرایوں میں 70 سے 100 فیصد تک خود ساختہ اضافہ کر دیا

پبلک ٹرانسپورٹرز نے کرایوں میں 70 سے 100 فیصد تک خود ساختہ اضافہ کر دیا

لاہور (نیوز ڈیسک) صوبہ پنجاب کے دارالحکومت لاہور میں پبلک ٹرانسپورٹرز نے کرایوں میں 70 سے 100 فیصد تک خود ساختہ اضافہ کردیا۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق ٹرانسپورٹرز کی طرف سے کیے گئے اضافے کے بعد لیہ کا کرایہ 1100 روپے سے بڑھا کر 1880 روپے جب کہ وفاقی دارالحکومت اسلام آباد کے لئے کرائے کو 1350 سے بڑھا کر2450 روپے کر دیا گیا ہے ، اسی طرح سٹی بس ٹرمینل سکندریہ کالونی اور جناح ٹرمینل ٹھوکر نیاز بیگ اور دیگر اڈوں سے چلنے والی ٹراسنپورٹ کے کرایوں میں بھی اضافہ کر دیا گیا ہے ، اس ضمن میں مسافروں کا کہنا ہے کہ کرایوں میں اضافہ غریب آدمی کی پہنچ سے بہت دور ہے ، عام آدمی اتنا زیادہ کرایہ ادا نہیں کر سکتا ، اس لیے ضروری ہے کہ حکومت کورونا سے بچاؤ کے ساتھ کرایوں میں اضافے کو واپس کرائے۔
دوسری طرف سندھ حکومت نے 2 دن بعد بین الصوبائی ٹرانسپورٹ بند کرنے کا فیصلہ کرلیا ، یہ فیصلہ ٹاسک فورس کے اجلا س کے بعد کیا گیا ، محکمہ داخلہ سندھ نے این سی اوسی کو خط کے ذریعے فیصلے سے آگاہ کردیا ہے ، اس ضمن میں محکمہ داخلہ سندھ نے این سی اوسی کو خط تحریر کردیا ہے، جس میں سندھ حکومت نے صوبے میں انٹر سٹی ٹرانسپورٹ بند کرنے کی درخواست کی ہے ، این سی اوسی سے مطالبہ کیا گیا کہ حکومت بین الصوبائی سطح پر انٹرسٹی ٹرانسپورٹ کو بند کرے۔
قبل ازیں خیبرپختونخوا کی صوبائی حکومت نے کورونا وائرس کے بڑھتے ہوئے کیسز کے پیش نظر صوبے میں پبلک ٹرانسپورٹ ہفتہ اور اتوار بند رکھنے کا فیصلہ کرلیا ، صوبائی حکومت کی طرف سے جاری کیے گئے ایک اعلامیہ میں کہا گیا کہ صوبے میں ہفتہ اور اتوار کے روز بین الاضلاعی پبلک ٹرانسپورٹ نہیں چلے گی جب کہ اس پابندی کا اطلاق پرائیویٹ اور مال بردار گاڑیوں پر نہیں ہوگا۔
مشیراطلاعات خیبرپختونخوا کامران بنگش نے کہا ہے کہ کورونا کی تیسری لہر پر قابو پانے کےلیے عوامی تعاون درکار ہے ، کیوں کہ خیبرپختونخوا کے مختلف اضلاع میں کورونا کیسز میں اضافہ ہورہاہے ، کورونا کےباعث اسپتالوں پربوجھ بڑھ گیا ہے ، جب کہ صوبائی وزیر صحت تیمور سلیم جھگڑا کا کہنا ہے کہ سوات کے اسپتالوں میں کورونامریض داخل ہیں ، خیبرپختونخوا میں اسپتالوں کی استعداد بڑھانے کےلیے اقدامات ہورہے ہیں ، اسپتالوں کی استعدادکارمیں اضافہ کیاجارہاہے ، صوابی ،چارسدہ اور مردان میں کورونامتاثرین کے لیے سہولیات دی جارہی ہیں ، عوام کوسہولتوں کی فراہمی کیلئےہرممکن کوشش کررہےہیں ، ایل آر ایچ کی نئی عمارت کورونا مریضوں کے لیے مختص کردیا گیا۔