0

بولرز کی خراب فارم نے خطرے کی گھنٹی بجا دی

کراچی: ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ سے قبل بولرز کی خراب فارم نے گرین شرٹس کے لیے خطرے کی گھنٹی بجا دی ہے۔ آئرلینڈ کے خلاف پہلی سیریز میں کسی کو توقع نہیں تھی کہ پاکستانی ٹیم جدوجہد کرتی نظر آئے گی، ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ کی تیاریوں کو حتمی شکل دے دی گئی ہے۔ آئرلینڈ نے سیریز کا پہلا میچ جیت کر خطرہ پیدا کر دیا جسے دینا اہم سمجھا جاتا ہے، یہ مختصر فارمیٹ میں گرین شرٹس کے خلاف ٹیم کی پہلی کامیابی ثابت ہوئی۔پاکستان نے دوسرے میچ میں کامیابی سے سیریز برابر کر دی، اب تیسرا اور فیصلہ کن میچ منگل کو ڈبلن میں ہوگا۔ مہمان باؤلنگ لائن دونوں میچوں میں توقعات کے مطابق کارکردگی نہیں دکھا سکی۔ بظاہر بڑا ہدف عبور کر لیا گیا ہے۔شاداب خان کو 54 رنز دینے کے بعد دوسرے میچ کے لیے ڈراپ کر دیا گیا لیکن پھر بھی باؤلنگ اٹیک نے 193 رنز بنائے، شاہین آفریدی نے 3 وکٹیں حاصل کیں لیکن 49 رنز دیے، ویزہ مسائل کے باعث تاخیر سے سکواڈ میں شامل ہونے والے محمد عامر کو پہلا میچ دیا گیا لیکن 44 رنز کی شکست برداشت کرنے کے لیے نسیم شاہ کی کارکردگی میں تسلسل نہیں، عباس آفریدی پوری تال میں نہیں، دیگر بولرز بھی توقعات پر پورا نہیں اتر رہے، جس نے ورلڈ کپ سے قبل ٹیم انتظامیہ کو تشویش میں مبتلا کر دیا ہے۔ شکار کیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں