36

عمران خان نے امریکا کیساتھ پاکستان کے تعلقات کو نقصان پہنچایا: وزیراعظم شہباز شریف

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) وزیراعظم محمد شہباز شریف نے کہا ہے کہ پاکستان تحریک انصاف کے چیئر مین اور سابق وزیراعظم عمران خان نے امریکا کے ساتھ پاکستان کے تعلقات کو بلاوجہ نقصان پہنچایا۔عمران خان کی جھوٹ اور دھوکہ دہی پر مبنی پالیسیوں نے ملکی معیشت کو تباہ کر کے رکھ دیا ہے۔برطانوی اخبار ’’دی گارڈین‘‘کوانٹرویومیں وزیراعظم نے کہا کہ عمران خان نے اپنے ذاتی ایجنڈے کےلئے کرپشن کے خاتمے کو اپنا منشور بنا کر پیش کیا لیکن وہ پاکستانی تاریخ کے سب سے زیادہ ناتجربہ کار،خود پسند، انا پرست اورناپختہ سیاست دان ثابت ہوا۔انہوں نے کہا کہ لیک ہونے والی آڈیوز سے اس بات کی تصدیق ہوتی ہے کہ عمران خان کرہ ارض پر سب سے زیادہ جھوٹ بولنے والا شخص ہے اور یہ بات میں خوشی سے نہیں کہہ رہا بلکہ یہ ہمارے لئے شرمندگی اورتشویش کا باعث ہے کیونکہ ان کے ذاتی ایجنڈے اور مقاصد کے لئے بولے گئے جھوٹ سے ہمارے ملک کے تشخص کو نقصان پہنچا ہے۔شہباز شریف نے کہا کہ عمران خان کو اپنے تمام دانستہ مجرمانہ اقدامات کے لئے جوابدہ ہونا پڑے گا۔ وہ اس سے قبل کبھی ملک کے مستقبل کے حوالے سے پریشان نہیں تھے، عمران خان نے معاشرے میں اتنی نفرت اور زہر بھر دیا ہےجو اس سے پہلے کبھی نہیں تھا، وہ حقائق کو توڑ مروڑ کر پیش کرتے ہیں اور معاشرے میں نفرت پھیلاتے ہیں۔وزیراعظم نے پاکستان کے دوسرے ممالک کے ساتھ تعلقات دوبارہ استوار کرنے کے حوالے سے اپنی کوششوں کا ذکرکرتے ہوئے کہا کہ وہ اقوام متحدہ کی جنر ل اسمبلی کے اجلاس کے موقع پراس وقت حیران رہ گئے جب کئی عالمی رہنمائوں نے ان سے ملاقات کے دوران عمران خان کے رویے کا ذکر کیا، بعض رہنمائوں نے مجھے پی ٹی آئی سربراہ کی شخصیت کے حوالے سے ذاتی طور پر آگاہ کیا کہ وہ (عمران خان) ناشائستہ رویے کے حامل، جھوٹے اور خود پسند تھے۔انہوں نے کہا کہ عمران خان نے امریکا کے ساتھ پاکستان کے تعلقات کو بلاوجہ نقصان پہنچایا۔ انہوں نے واضح کیا کہ وہ پاکستان کےچین کے ساتھ قریبی تعلقات کودوبارہ سے بہتر بنائیں گے جنہیں عمران خان کی طرف سے چین پاکستان اکنامک کوریڈور(سی پیک) کو مبینہ طور پر روکے جانے کے باعث نقصان پہنچا۔وزیراعظم نے اس منصوبے کو جاری رکھنے کے عزم کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ وہ نومبرمیں چین، جو پاکستان کا سب سے زیادہ آزمودہ دوست ہے ، کا دورہ کریں گے ۔ انہوں نے کہا کہ سی پیک نہ صرف پاکستان بلکہ پورے خطے کی بہتری کےلئے ایک اچھا منصوبہ ہے۔وزیراعظم نے مسلم لیگ (ن) کے قائد نوازشریف سے حکومتی امورمیں مشاورت کے حوالے سے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ نواز شریف ان کے رہنما اور بڑے بھائی ہیں اور وہ ان سے مشورہ کرتے ہیں لیکن انہوں نے مجھے فیصلے کرنے کےلئے مکمل اختیاردیا ہوا ہے۔خاندانی سیاست کے حوالے سے عمران خان کی تنقید کو مسترد کرتے ہوئے ایک سوال کےجواب میں وزیراعظم نے کہا کہ یہ خاندانی سیاست کا معاملہ نہیں ہے بلکہ یہ اہلیت، عوامی حمایت اورعوام کا اعتمادجیتنے کی بات ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں